ذہنی بیماریاں

میری کھانے پینے میں بے قاعدگی کی بیماری ایسی ہے جس کے ساتھ میں ایک عرصے سے لڑ رہی ہوں۔ میں نے اپنے مسئلے کا سر اُ ٹھا کر سامنا کرنے کا فیصلہ کیا۔ میرا مکمل پیغام بس اتنا ہے کہ آپ جیسے بھی ہیں ، خود سے محبت کریں اور اپنی تمام خوبصورت خامیوں اور اپنے اندر موجود کمی کو تسلیم کریں۔ جب میں نے محسوس کیا کہ میں خود سے محبت نہ کرنے والی کیفیت کا شکار ہورہی ہوں تو مجھے معلوم تھا کہ مجھے میری اپنی رائے کو سننا پڑے گا اور اور اس کیفیت کو درست کرنا پڑے گا۔ میں نے محسوس کیا کہ مجھے مدد کی ضرورت ہے، نا صرف میرے لیئے بلکہ میرے چاہنے والوں کے لیئے بھی ۔
کیشا، گلوکار-

تعارف:

خوراک اور کھانے پینے کے معمولات میں بے قاعدگی (Eating Disorder) سے مراد وہ بیماری ہے جس میں انسان اپنے جسم کی بناوٹ اور وزن کے لیئے شدید خدشات کا شکار رہتا ہے جس کی وجہ سے وہ اپنے کھانے پینے کی عادات میں تبدیلی (کمی یا زیادتی) پیدا کرتا ہے جس کے نتیجے میں جسم اور دماغ کی کارکردگی متاثر ہوتی ہے جو کہ بالآخر انسان کی جسمانی اور دماغی صحت پر اثر انداز ہوتی ہے۔ یہ ایک عام خیال ہے کہ خوراک اور کھانے پینے کے معمولات میں بے قاعدگی (Feeding and Eating Disorder) انسان کی خود ساختہ ہوتی ہے حالانکہ یہ ایک سنجیدہ اور مہلک بیماری ہے جسکا اگر علاج نہ کیا جائے تو ایک انسان کے کھانے پینے کے انداز میں شدید خلل پیدا کرسکتی ہے۔ جیسا کہ تذکرہ کیا گیا ہے، خوراک، جسمانی وزن اور بناوٹ کے حوالے سے جنونیت کی کیفیت اس بیماری کی علامت ہوسکتیہے۔

نشانیاں اور علامات:

کچھ عوامل جو کہ اس بیماری کو واضح طو رپر ظاہر کرتے ہیں ، مندرجہ ذیل ہیں:
۔ کھانے پینے سے متعلق مشکلات
۔ جسمانی صحت کی خرابی
۔ روذمرہ زندگی کے معمولات میں خرابی

خوراک اور کھانے پینے کے معمولات میں بے قاعدگی کی بیماری(Feeding and Eating Disorder) کی اقسام:

۱) اینوریکسیا نرووسا (Anorexia Nervosa):

یہ ایک قسم ہیں جس کا شکار انسان بہت کم یا بالکل کھانا نہیں کھاتا اور اس خیال سے گھرا رہتا ہے کہ وہ بہت ’’وزنی ‘‘ یا ’’موٹا‘‘ ہے اور اپنے وزن کو ہر طرح کم سے کم رکھنے کی کوشش کرتا ہے مثلاً بھوکا رہنا یا بہت زیادہ کسرت (Exercise)کرنا

۲) بیولیمیا نرووسا (Bulimia Nervosa): 

اس بیماری میں انسان مختلف وقفوں سے بھاری بھر کم کھانے کھاتا رہتا ہے اور پھر جان بوجھ کر اپنے آپ کو بیمار کرلیتا ہے اور لیکسیٹو (آنتوں کو خالی کرنے کی دوا) (Laxatives) استعمال کرتا ہے تا کہ اپنے وزن پر قابو رکھ سکے۔

۳) بنج -ایٹنگ ڈس آرڈر (Binge-Eating Disorder):

بنیادی طور پر اس بیماری میں ایک انسان بہت کم وقت کے دورانیے میں بہت زیادہ مقدار میں کھانا کھانے پر مجبور ہوجاتا ہے جس پر وہ بعد میں شرمندگی اور پچھتاوا محسوس کرتا ہے۔ البتہ اس کیفیت میں آپ اس کھانے کو زبردستی اپنے جسم سے نکالنے کی کوشش نہیں کرتے۔

۴) پیکا (Pica):

مٹی یا اس جیسی دوسری چیزوں کے کھانے کی عادت جو کہ کھانے کے قابل تصور نہیں کی جاتیں۔

۵) ریومینیشن ڈس آرڈر (Rumination Disorder):

اس بیماری میں کھانا اُگل دینے کی کیفیت شامل ہے جو کہ ایک مہینے تک جاری رہتی ہے۔ 

۶) کھانے سے اجتناب کرنا یا محدود قسم کا کھانا کھانا (Avoidant/Restrictive Food Intake Disorder):

دن میں کم سے کم مقدار میں کھانا کھانا جس کی وجہ سے غذائیت میں کمی واقع ہوجاتی ہے۔ 

کھانے پینے کی بیماری ٹھیک کرنا ایک مشکل کام معلوم ہوتا ہے البتہ صحیح رہنمائی اور مدد حاصل ہو تو اس سے نمٹا جاسکتا ہے۔ ہم یہاں آپ کی مدد کے لیئے موجود ہیں۔ہم سے رابطہ کریں۔ رُو برو۔ آئیے بات کریں۔


!ہم سے رابطہ کریں ، روح برو - آئیں بات کریں


  تھراپی حاصل کریں  


نیند سے متعلق بیماریوں میں کیا شامل ہے؟ آگے پڑھیں

  سونا - جاگنا